آئندہ شائع کی جانے والی تحریریں

- کمپیوٹر کی ہارڈ ڈرائیو کے اسپیس کو کس طرح بہتر انداز میں استعمال کریں؟
- ٹورینٹ کیا ہے؟
- بلاگر میں مکمل اردو بلاگ بنانا سیکھیں۔ تمام ضروری معلومات شیئر کی جائیں گی۔

ہفتہ, اپریل 04, 2015

مختلف سوفٹویئرز میں عربی کے مخصوص حروف کیسے لکھیں؟

کمپیوٹر میں یونیکوڈ اردو ٹائپ کرنے لیے مختلف کی بورڈز دستیاب ہیں۔ بندہ چونکہ پہلے انپیج میں ٹائپنگ سیکھ چکا تھا، لہٰذا یونیکوڈ کے آنے پر خواہش تھی کہ ایسا کی بورڈ مل جائے جو ان پیج کی بورڈ کے قریب قریب ہو۔ کچھ تلاش کے بعد ایک کی بورڈ ملا، میری رائے کے مطابق یہ ان پیج کے کی بورڈ سے قریب تر ہے۔
اب جو ساتھی نئے سیکھنے والے ہیں، ان کو کون سا کی بورڈ سیکھنا چاہیے، یہ ایک اہم سوال ہے۔
میری رائے طلبۂ مدارس کے لیے ہمیشہ یہ رہی ہے کہ وہ عربی کی بورڈ نہ سیکھیں، کیونکہ عربی کی بورڈ کو اردو اور انگریزی کی بورڈز کے ساتھ بالکل مناسبت نہیں ہے، کیونکہ احباب جانتے ہیں کہ ان پیج کا فونیٹک کی بورڈ ملتے جلتے انگریزی حروف پر ترتیب دیا گیا ہے۔ مثلاً ”p“ پر آپ کو ”‬پ“ ملے گا۔ اس طرح حروف کو یاد رکھنے میں سہولت ہوجاتی ہے۔ اس طرح جو آدمی اردو سیکھ لے وہ تھوڑی سی مشق سے انگریزی ٹائپنگ کرسکتا ہے، اور انگریزی ٹائپنگ سیکھا ہوا شخص کچھ توجہ سے اردو بھی ٹائپ کرلیتا ہے۔ اور عربی کے تقریباً سارے ہی حروف اردو میں موجود ہیں، تو الگ سے کیوں نیا کی بورڈ سیکھا جائے۔ کئی کی بورڈز پر توجہ دینے کے بجائے بہتر یہ ہے ایک ہی کی بورڈ سیکھا جائے اور اسی پر مشق کی جائے۔ اور اس کے لیے فونیٹک (صوتی) کی بورڈ بہترین انتخاب ہے۔
عربی کے کچھ خاص حروف جو اردو نہیں مستعمل نہیں وہ بھی اس کی بورڈ میں رکھ دیئے گئے ہیں۔ ذیل کے جدول سے رہنمائی لیجیے۔
یہ کی بورڈ ”پاک اردو انسٹالر“ کے ساتھ ہی رکھا گیا ہے۔ پاک اردو انسٹالر ایک سافٹویئر ہے جس کو انسٹال کرنے سے آپ کمپیوٹر میں اردو لکھنے کے قابل ہوجاتے ہیں۔
اس میں شامل اردو پاک سائن کی بورڈ کی خاصیت یہ ہے کہ اس میں عربی، اردو اور فارسی کے تمام کے تمام کیریکٹرز موجود ہیں، حتی کہ قرآن میں استعمال ہونے والے رُموزِ اوقاف بھی۔ مثلاً ذیل میں عربی کے وہ خاص حروف لکھے گئے ہیں جو اس کی بورڈ سے لکھے جاتے ہیں، ساتھی ان حروف کی وجہ سے پریشان ہوکر عربی کی بورڈ سیکھتے ہیں، تھوڑی سی توجہ کی جائے تو پاک اردو انسٹالر کے کی بورڈ سے ہی یہ حروف ٹائپ ہوسکتے ہیں۔ اس کے بعد صرف فونٹ تبدیل کرنے کی ضرورت ہوتی ہے۔
اس کے علاوہ کئی بے شمار کیریکٹرز ہیں جو اس کی بورڈ میں شامل ہیں۔ اس کے سیٹ اپ میں ایک فائل ہوگی “Readme” کے نام سے۔ اس میں تمام کیز کی تفصیلات موجود ہیں۔ واقعتا یہ کی بورڈ ہمیں فارسی / عربی کی بورڈز سے بے نیاز کردیتا گا۔ یہ بندہ کا تجربہ ہے۔ خصوصاً وہ ساتھی جو صوتی (فونیٹک) کی بورڈ کے عادی ہیں اور انہیں عربی کی ضرورت ہے، تو یہ کی بورڈ ان کے لیے تحفہ ہے۔
یہ بات یاد یاد رکھنے کی ہے کہ اس کی بورڈ کی مدد سے ہر جگہ اردو عربی لکھی جاسکتی ہے، مثلاً کوریل ڈرا، فوٹوشاپ، السٹریٹر،،(بشرطیکہ ان سوفٹویئرز میں اردو / عربی کی سپورٹ شامل کی گئی ہو) کیلک، انٹرنیٹ وغیرہ۔

7 تبصرے:

  1. بہت شکریہ بھائی، کام کی بتائی ہے۔

    جواب دیںحذف کریں
    جوابات
    1. بلاگ میں آمد اور پسندیدگی کے لیے شکریہ۔

      حذف کریں
  2. الحمد للہ آپ نے تو بڑے پتے کی بات بتائی ہے.
    البتہ کورل میں اردو عربی سپورٹ کیسے شامل ہوتا ہے.
    کیونکہ ہمیں کورل میں اردو ٹائپ کرنے کی گنجائش مل جائے تو بہت سا کام بڑا آسان ہو جائے گا.
    فیاض احمد

    جواب دیںحذف کریں
    جوابات
    1. کوریل 14 اور اور اس سے اوپر کے ورژن میں اردو براہ راست لکھ سکتے ہیں۔ کچھ حروف مثلاً ی، ه، ك وغیرہ میں پریشانی ہوتی ہے، تو یہ حروف آپ عربی والے لکھ لیں۔ میں کوریل 14 استعمال کرتا ہوں، اس میں مکمل سپورٹ شامل نہیں، اک آدھ جملہ لکھا جاسکتا ہے۔ سنا ہے بعد کے ورژ میں اچھی سپورٹ شامل کی گئی ہے۔

      حذف کریں
  3. اسلام علیکم ۔۔۔۔بھائی ورلڈ کی فائل جب شاملہ میں شامل کی جاتی ہے تو اس کی اردو میں تبدیلی ہو جاتی ہے ، ایسا کوئی طریقہ ہے کہ ورڈ میں لکھی ہوئی تحریر شاملہ میں جب شامل کی جائے تو اس میں تبدیلی نہ ہو ؟؟

    جواب دیںحذف کریں
  4. اسلام علیکم عطاء اللہ بھائی۔ ۔ ۔ عربی رسم الخط کو عربی فونٹ پر اردو کی بورڈ کے ذریعے کیسے لکھتے ہیں۔ مجھے عربی کی بورڈ یاد نہیں ہے میں اردو کی بورڈ کے ذریعے لکھنا چاہتا ہوں۔ ۔۔ اور آپ نے مجھے بتایا تھا کہ alt کے ذیعے یہ الفاظ آجاتے ہیں۔ ۔ ۔ ۃ ؤ وغیرہ۔وغیرہ وغیرہ۔
    محمد شاہد (دار العلوم کراچی)

    جواب دیںحذف کریں
    جوابات
    1. وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ
      محترم! عربی اور اردو میں جو مشترک حروف ہیں، ان کو ٹائپ کرنا آسان ہے اس لیے ہم ان حروف پر بات کرلیتے ہیں جو عربی میں موجود ہیں اور اردو میں موجود نہیں، فرض کریں أ (الف ہمزہ) اور ي (نقطوں والی ی) وغیرہ۔ تو اوپر پوسٹ میں انہی حروف کو ٹائپ کرنے کے بارے میں بتایا گیا ہے۔ آپ پوسٹ پڑھ لیجیے، اگر کوئی مسئلہ ہوگا تو ضرور عرض کروں گا۔ جزاک اللہ

      حذف کریں

اپنا تبصرہ یہاں تحریر کیجیے۔